”یہ ایپلی کیشن آپ کی ذاتی تصاویر اور فون نمبرز چرا رہی ہے اور۔۔۔“ اینڈرائڈ صارفین پر ”بم“ گر گیا، ایک ایسی ایپلی کیشن کے بارے میں تہلکہ خیز انکشاف سامنے آ گیا جو ہر کوئی استعمال کرتا ہے، جان کر آپ بھی اپنا سرپکڑ لیں گے

لاہور (ویب ڈیسک) ہر کوئی مفت ایپلی کیشنز کے حصول کا خواہشمند ہوتا ہے اور جب ایسی کوئی ایپلی کیشن نظر آتی ہے تو اس کے بارے میں جانے بغیر ہی ڈاﺅن لوڈ بھی کر لی جاتی ہے۔
ہیکرز لوگوں کی ذاتی معلومات یا تصاویر اور ویڈیوز وغیرہ چرانے کیلئے ایپلی کیشنز کا استعمال کرتے ہیں اور ان کی آڑ میں لوگوں کے سمارٹ فون میں وائرس بھی انسٹال کر دیتے ہیں اور پھر باآسانی اس صارف کے رابطہ نمبر، تصاویر اور ویڈیوز سمیت دیگر ذاتی مواد چرا لیا جاتا ہے۔
یہ ایپلی کیشن انسٹال ہونے کے بعد ایک ’پاپ اپ‘ ونڈو کے ذریعے ’موبائل کے سست رفتار ہونے اور بیٹری ضائع ہونے“ کی وارننگ دیتے ہوئے ایک نئی ایپلی کیشن انسٹال کرنے کا کہا جاتا ہے اور جیسے ہی صارفین اسے انسٹال کرتے ہیں تو موبائل ہیکرز کے قبضے میں چلا جاتا ہے۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ چھان بین میں انکشاف سامنے آیا ہے کہ اس وقت 60 ہزار سے زیادہ اینڈرائڈ ڈیوائسز اس ایپلی کیشن کے ذریعے انسٹال ہونے والے وائرس سے متاثر ہونے کے بعد ہیکرز کے قبضے میں ہیں۔
پلے سٹور پر دستیاب جب اس ایپلی کیشن کو انسٹال کیا جاتا ہے تو یہ جگہ کی معلومات، فون نمبرز، ایس ایم ایس اور لین دین سے متعلق معلومات کے علاوہ تصاویر اور ویڈیوز بھی چرا لیتی ہے جسے ہیکرز کسی بھی مقصد کیلئے استعمال کر سکتے ہیں۔
یہی نہیں بلکہ یہ ایپلی کیشن بیک گراونڈ میں ایک ’ایڈ کلکر‘ کو بھی چلاتی ہے جس کے باعث ایپلی کیشن بنانے والے ہیکرز اشتہارات پر کلک کی مد میں پیسے بھی بنا رہے ہیں۔ اگر آپ نے بھی اپنی ’بیٹری‘ بچانے کیلئے یہ ایپلی کیشن انسٹال کر رکھی ہے تو فوری ان انسٹال کر دیں، کہیں ایسا نہ ہو کہ بیٹری بچانے کے چکر میں بہت کچھ گنوا بیٹھیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں