سربیا میں ہزاروں افراد کا دوبارہ لاک ڈاؤن کے فیصلے پر احتجاج، پارلیمنٹ پر دھاوا بول دیا

بلغراد: (سٹی نیوز) سربیا میں ہزاروں افراد نے ملک میں دوبارہ لاک ڈاؤن کے فیصلے کے خلاف احتجاج کیا۔ مشتعل افراد نے پارلیمنٹ پر دھاوا بول دیا جنہیں منتشر کرنے کے لئے پولیس نے طاقت کا استعمال کیا۔

کورونا لاک ڈاؤن نا منظور کے نعرے لگاتے سربیا میں ہزاروں مظاہرین نے دوبارہ شٹ ڈاون کے اعلان کے خلاف پارلیمنٹ پر دھاوا بول دیا، بعض مظاہرین پولیس حصار توڑ کر پارلیمنٹ کے اندر پہنچنے میں کامیاب ہو گئے جنہیں پولیس نے باہر دھکیلا، پر تشدد مظاہرین نے پولیس پر پتھراؤ بھی کیا، مشتعل افراد کو منتشر کرنے کے لئے فورسز کی جانب سے آنسو گیس کا استعمال کیا گیا۔مظاہرے میں 43 پولیس اہلکاروں سمیت 60 افراد زخمی ہوگئے، متعدد گاڑیاں اور املاک نذر آتش کر دی گئیں، سربیا کے صدر نے ہفتے کے روز سے دارالحکومت میں لاک ڈاؤن کا اعلان کیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں