وزیر اعظم نواز شریف نے کہا تھا کہ اگر تحقیقات کے نتیجے میں مجھ پر کوئی الزام ثابت ہوا تو میں ایک لمحے کی تاخیر کے بغیر گھر چلا جاؤں گا

لاہور (سٹی نیوز )پاناما لیکس کیس میں جے آئی ٹی کی رپورٹ منظر عام پر آنے کے بعد لاہور ہائی کورٹ بار ،پاکستان بار کونسل اور سپریم کورٹ بار کی جانب سے وزیراعظم نواز شریف کے استعفے کا مطالبہ سامنے آگیا۔
تفصیلات کے مطابق جے آئی ٹی کی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرائے جانے کے بعد وزیر اعظم کے استعفے کا مطالبہ زور پکڑ گیا ہے اور اب لاہور ہائی کورٹ بار نے بھی وزیراعظم سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کردیا ہے۔ادھر وائس چیئر مین پاکستان بار کونسل احسن بھون کا کہنا ہے کہ جے آئی ٹی کی رپورٹ سامنے آنے کے بعد اب وزیر اعظم کے پاس اخلاقی جواز باقی نہیں رہا لہذا انہیں وزارت عظمیٰ کے عہدے سے ہٹ جانا چاہیے۔سیکریٹری سپریم کورٹ بار نے کہا کہ وزیراعظم کے تمام احکامات اب غیر قانونی ہیں۔
واضح رہے کہ پاناما کیس منظر عام پر آنے کے بعد وزیر اعظم نواز شریف نے کہا تھا کہ اگر تحقیقات کے نتیجے میں مجھ پر کوئی الزام ثابت ہوا تو میں ایک لمحے کی تاخیر کے بغیر گھر چلا جاؤں گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں