قطر اور سعودی عرب کے تنازعے میں جانور بھی محفوظ نہیں رہے

جدہ(ویب ڈیسک) قطر اور سعودی عرب کے تنازعے میں جانور بھی محفوظ نہیں رہے اور سعودی عرب میں اونٹوں کی ایک بڑی تعداد بے یارومددگار رہ گئی ہے اور موت کے منہ میں جا رہی ہے۔ سعودی عرب نے قطر کے ساتھ قطع تعلق کرکے اپنا بارڈر بند کر لیا ہے اور قطری باشندوں کو اپنے ملک سے نکال دیا ہے۔ کئی قطری باشندوں نے سعودی عرب میں فارم ہاؤس بنا کر وہاں اونٹ پال رکھے تھے۔ وہ لوگ خود تو فوراً قطر واپس چلے گئے لیکن اس قلیل مہلت میں اپنے اونٹوں کو واپس نہ لیجا سکے۔
اب ان کے یہ اونٹ سعودی عرب میں بے یارومددگار صحرامیں بھٹک رہے ہیں اور بھوک اور پیاس کے باعث موت کے منہ میں جا رہے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق اونٹوں کی بڑی تعداد سعودی عرب کی طرف سے بارڈر پر لگائے گئے جنگلے کے آس پاس گھوم رہی ہے کیونکہ ان کے مالک انہیں یہاں تک لے آئے تھے لیکن وقت کی کمی کے باعث اونٹوں سمیت قطر جانا ان کے لیے مشکل تھا چنانچہ وہ اونٹوں کو سعودی عرب کی طرف ہی چھوڑ کر خود قطر میں داخل ہو گئے۔ اب یہ سینکڑوں اونٹ سعودی عرب کی طرف بارڈر کے ساتھ لاوارث گھوم رہے ہیں۔ دی میٹرو نے ایسے کئی اونٹوں کی تصاویر بھی شائع کی ہیں جو بھوک اور پیاس کے باعث موت کے گھاٹ اتر چکے ہیں اور ان کے جسم صحرا کی ریت پر پڑے گل سڑ رہے ہیں۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں