اسرائیلی فوج نے مسلمانوں کے خون کی ندیاں بہا دیں، اتنی شہادتیں کہ پوری دنیا کانپ اٹھی

یروشلم (ویب ڈیسک )غزہ میں احتجاج کرنے والے نہتے اور معصوم فلسطینیوں پر اسرائیلی فوج نے وحشیانہ فائرنگ کردی جس کے باعث 37 افراد شہید ہو گئے ہیں جبکہ 1600 سے زائد زخمی ہیں ۔
غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسرائیلی سرحد سے ملحقہ علاقے غزہ پٹی پر امریکی سفارتخانے کی یروشلم ( بیت المقدس) منتقلی اور افتتاح کے خلاف فلسطینی احتجاج کر رہے تھے کہ اسرائیلی فوج کی جانب سے ان پر فائرنگ کی گئی اور آنسو گیس کے شیل فائر کیے گئے جس کے باعث 37 فلسطینی شہری شہید ہو گئے ہیں جبکہ 1600 سے زائد زخمی ہیں ۔
آج صبح صبح سے فلسطینی غزہ پٹی پر احتجاج کر رہے تھے جبکہ یہ احتجاج ’ گریٹ مارچ آف ریٹرن ‘ تحریک کا حصہ تھا جبکہ اس احتجاجی ریلی میں شرکت کرنے کیلئے 10 ہزار سے زائد فلسطینی غزہ پٹی پر پہنچے تھے۔واضح رہے کہ 30 مارچ سے شروع ہونے والے احتجاج میں اسرائیلی فوج نے اب تک 74 فلسطینیوں کو شہید کیا جاچکا جبکہ 9ہزار 400سے زائد فلسطینی زخمی ہیں۔

دوسری جانب اسرائیلی فوج کی فائرنگ پر وزارت صحت کا کہنا تھا کہ فائرنگ کے واقعے میں متعدد افراد ہلاک اور 918 زخمی ہوئے، جن میں زیادہ تر کی عمریں 18 سال سے کم ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں