سماجی فاصلہ قائم رکھنے کی ہدایات کا مذاق اُڑانے والی 21 سالہ لڑکی کورونا وائرس کا شکار ہوگئی

سماجی فاصلہ قائم رکھنے کی ہدایات کا مذاق اُڑانے والی 21 سالہ لڑکی کورونا وائرس کا شکار ہوگئی

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) چند روز قبل ایک امریکی لڑکی کی سوشل میڈیا پر ویڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں وہ سماجی میل جول ختم کرنے اور گھر میں رہنے کی حکومتی ہدایات کا مذاق اڑا رہی ہوتی ہے۔ اب خبر آئی ہے کہ وہ لڑکی بھی کورونا وائرس میں مبتلا ہو گئی ہے۔ دی مرر کے مطابق اس 21سالہ لڑکی کا نام آئرلینڈ ٹیٹی ہے جو امریکی ریاست ٹینیسی کی رہائشی ہے۔ گزشتہ روز اس کی طبیعت خراب ہوئی جس پر اسے ہسپتال لایا گیا۔ وہاں اس کا ٹیسٹ کیا گیا تو اس میں کورونا وائرس کی تشخیص ہو گئی۔

ضرور پڑھیں: شمالی افغانستان میں گھمسان کا رَن،طالبان نے افغان فوجیوں کو ناکوں چنے چبوا دیئے

آئرلینڈ ٹیٹی نے اپنی ویڈیو میں کہا تھا کہ ”میں جانتی ہوں کہ میل جول میں کمی اور گھر میں رہ کر ہم ایک دوسرے کو محفوظ رکھ سکتے ہیں لیکن مجھے اس وائرس کی کوئی فکر نہیں ہے اور کسی دوسرے کو بھی میری فکر نہیں کرنی چاہیے۔ مجھے یہ وائرس لگ ہی نہیں سکتا۔ “ اب کورونا وائرس کی تشخیص ہونے کے بعد اس کا کہنا ہے کہ ”یہ میری زندگی کا خوفناک ترین تجربہ ہے۔ مجھے ایسے لگ رہا ہے جیسے ہمہ وقت کوئی بھاری بھرکم شخص میرے سینے پر بیٹھا ہو، سانس لینا بھی میرے لیے محال ہے، مجھے کھانسی کا دورہ پڑتا ہے اور کھانستے کھانستے میرے گلے سے خون آنے لگتا ہے۔مجھے یہ وائرس میرے ایک دوست سے لگا جس سے ملتے ہوئے میں نے احتیاط نہیں کی تھی۔ میں لوگوں کو نصیحت کروں گی کہ وہ گھر پر رہیں اور لوگوں سے ملتے ہوئے پوری احتیاط کریں۔“

اپنا تبصرہ بھیجیں