بھارتی مذہبی رہنما گرو گرمیت سنگھ کو آج (پیر کو) سزا سنائی جائے گی

چندی گڑھ (ویب ڈیسک) جنسی زیادتی کیس میں مجرم قرار دیے گئے بھارتی مذہبی رہنما گرو گرمیت سنگھ کو آج (پیر کو) سزا سنائی جائے گی۔ ہنگاموں کے خدشے کے پیش نظر بھارتی ریاستوں ہریانہ اور پنجاب میں سیکیورٹی انتہائی سخت کردی گئی ہے۔
تفصیلات کے مطابق 2002 کے جنسی زیادتی کیس میں مجرم قرار دیے گئے سُچا سودا کے سربراہ گرو گرمیت رام رحیم سنگھ کو روہتک کی جیل میں سزا سنائی جائے گی۔ بھارتی قانونی ماہرین کا خیال ہے کہ گرو گرمیت سنگھ کو 7 سال تک قید کی سزا سنائی جا سکتی ہے۔
گرو گرمیت کو سزا ہونے کے بعد پھوٹنے والے ممکنہ ہنگاموں کے پیش نظر بھارتی ریاستوں پنجاب اور ہریانہ میں سیکیورٹی انتہائی سخت کردی گئی ہے، اور دونوں ریاستوں میں ہزاروں اضافی اہلکار تعینات کیے گئے ہیں۔ دونوں ریاستوں میں سکول، کالجز بند کردیے گئے ہیں جبکہ پبلک ٹرانسپورٹ اور ٹرین سروس بھی معطل کردی گئی ہے۔ ممکنہ ہنگاموں کو پھیلنے سے روکنے کیلئے موبائل اور انٹرنیٹ سروسز بھی بند کردی گئی ہیں۔
واضح رہے کہ جمعہ کے روز گرو گرمیت رام رحیم سنگھ کو جنسی زیادتی کیس میں مجرم قرار دیا گیا تھا جس کے بعد پنجاب اور ہریانہ میں شدید ہنگامے پھوٹ پڑے تھے۔ گرو گرمیت کو پنکچولہ کی عدالت کی جانب سے سزا سنائی گئی تھی جہاں ہونے والے چند گھنٹوں کے ہنگاموں کے باعث 32 افراد ہلاک اور 300 سے زائد زخمی ہوگئے تھے۔ پولیس کی بھاری نفری جب ہنگاموں پر قابو پانے میں ناکام ہوئی تو بھارتی فوج کو میدان میں آکر کرفیو کے ذریعے ہنگاموں پر قابو پانا پڑا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں