’رمضان میں آنے والے اُن عمرہ زائرین کو 6 ماہ کے لئے جیل میں ڈال دیا جائے گا جو۔۔۔‘ سعودی عرب نے انتہائی خطرناک اعلان کردیا

یاض(مانیٹرنگ ڈیسک) عمرے کے لئے جائیں اور وہاں جیل میں قید ہو جائیں اور پھر خوب رسوائی کے بعد گھر کو آئیں ، اس سے بڑھ کر افسوسناک بات کیا ہو سکتی ہے۔ اگر آپ اس طرح کے انجام سے دوچار نہیں ہونا چاہتے، اور کون ہونا چاہے گا، تو پھر عمرہ کیلئے جائیں تو بہت محتاط رہیں کیونکہ اگر ویزہ کی معیاد سے زائد قیام کیا تو ناصرف 50ہزار ریال جرمانہ ادا کرنا ہوگا بلکہ چھ ماہ قید میں بھی گزارنے پڑیں گے۔
سعودی گزٹ کے مطابق سعودی جنرل ڈائریکٹوریٹ آف پاسپورٹس کا کہناہے کہ انٹری ویزہ کی معیاد ختم ہونے کے بعد مملکت میں قیام جاری رکھنے والوں کو جرمانے اور قید کی سزا کے بعد ڈی پورٹ کردیا جائے گا۔ عمرہ زائرین پر زور دیا گیا ہے کہ وہ اپنے ٹریول شیڈول کی پابندی کریں اور انٹری ویزہ کی معیاد ختم ہونے سے پہلے مملکت سے روانہ ہوجائیں۔
کیا یہ واقعی سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کی لاش ہے؟ بالآخر اصل حقیقت سامنے آ گئی
سعودی حکام کی جانب سے یہ بھی واضح کیا گیا ہے کہ عمرہ ویزے پر آنے والوں کو مکہ، جدہ او رمدینہ سے باہر جانے کی اجازت نہیں ہے۔ اسی طرح شہریوں کو بھی خبردا رکیا گیا ہے کہ وہ زائد المعیاد ویزے والے غیر ملکی افراد کو اپنے پاس پناہ دینے سے گریز کریں ورنہ انہیں بھی قانونی کارروائی کا سامنا کرنا پڑے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں