بھارتی ائرلائنوں کے عملے کے ساتھ سعودی عرب پہنچتے ہی کچھ ایسا سلوک شروع ہو جاتا ہے کہ اب یہ عملہ سعودی عرب کا رخ کرنے سے ہی ڈرنے لگا

جدہ (ویب ڈیسک) بھارتی ائرلائنوں کے عملے کے ساتھ سعودی عرب پہنچتے ہی کچھ ایسا سلوک شروع ہو جاتا ہے کہ اب یہ عملہ سعودی عرب کا رخ کرنے سے ہی ڈرنے لگا ہے۔
بھارتی ائیرلائنوں کا کہنا ہے کہ ان کی پروازیں سعودی عرب پہنچتے ہی سعودی حکام عملے کے اصل پاسپورٹ اپنے پاس رکھ لیتے ہیں اور فوٹو کاپیاں ان کے ہاتھ میں تھما دیتے ہیں۔ سعودی عرب میں قیام کے دوران عملے کے پاس صرف یہ فوٹو کاپیاں ہی ہوتی ہیں۔
گزشتہ بدھ کے روز ائیرانڈیا کے پائلٹ اور فضائی عملہ جدہ میں گھوم پھر رہے تھے کہ سعودی پولیس نے انہیں پکڑ لیا کیونکہ ان کے پاس اصل پاسپورٹ نہیں تھے۔ رپورٹ کے مطابق اس عملے کا تعلق ائیرانڈیا کی پرواز 931 سے تھا یہ 26 جولائی کے روز جدہ میں لینڈ نگ کے بعد ڈنر کیلئے نکلے تھے کہ ایک جگہ پولیس نے روک لیا۔ جب ان کے پاس اصل پاسپورٹ برآمد نہ ہوئے تو پولیس انہیں اپنے ساتھ لے گئی اور تین گھنٹے تک ان سے پوچھ گچھ کی گئی۔ پولیس نے انہیں بتایا کہ ان کے پاس اصل پاسپورٹ ہونا لازمی تھے کیونکہ فوٹو کاپی کو اصل کے متبادل کے طور پر تسلیم نہیں کیا جاسکتا۔
بھارتی حکام نے اس واقعے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ’’ پاسپورٹ کسی بھی شہری کی شناخت کا ثبوت اور اس کی ملکیت ہوتا ہے۔ بیرون ملک موجود کسی بھی شہری کے پاس پاسپورٹ نہ ہوتو اس کی حیثیت محض ایک پناہ گزین کی رہ جاتی ہے۔ سعودی عرب کو ہمارے ساتھ اس طرح کا سلوک نہیں کرنا چاہئیے۔ ہم ان کی اجازت سے ہی ان کے ائیرسپیس میں داخل ہوتے ہیں۔ ہم یہ مطالبہ کر رہے ہیں کہ اس مسئلے کو حل کیا جائے تاکہ ہماری ائیر لائنوں کے عملے کو دوبارہ سعودی عرب میں اس طرح کے واقعے کا سامنا نہ کرنا پڑے۔‘‘

اپنا تبصرہ بھیجیں