سری لنکا کیخلاف میچ کے بعد پی سی بی کا ایسا اقدام کہ قومی کھلاڑیوں کا بڑا نقصان ہو گیا

لاہور (نیوز ڈیسک) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے قومی ٹی 20 ٹورنامنٹ 11 سے نومبر تک فیصل آباد میں کرانے کا اعلان کیا ہے جس کے باعث قومی کرکٹ ٹیم کے صف اول کے کھلاڑی بنگلہ دیش پریمیئر لیگ (بی پی ایل) کے پہلے مرحلے میں شریک نہیں ہو سکیں گے۔

پی سی بیکے ڈائریکٹرانٹرنیشنل کرکٹ ہارون رشید نے کے مطابق نیشنل ٹی 20 کپ 11 نومبر سے اقبال سٹیڈیم میں شروع ہوگا فیصل آباد میں شروع ہو گا جس کا فائنل 28 نومبر کو کھیلا جائے گا۔ ان کے مطابق پاکستانی کرکٹرز کو 11 سے 17 نومبر تک قومی ٹورنامنٹ میں حصہ لینا ہوگا جس کے بعد وہ بنگلا دیش پریمئیر لیگ میں شرکت کے مجاز ہونگے۔
دوسری جانب (بی پی ایل) کا آغاز 4 نومبر سے سلہٹ میں ہو رہا ہے جو 12 دسمبر تک جاری رہے گی۔ اس لیگ میں پاکستان کے کئی نامور کھلاڑیوں نے شرکت کرنی ہے جو اب خطرے میں نظر آ رہی ہے۔ فاسٹ باؤلر محمد عامر کا ڈھاکہ ڈائنامائٹ، بابر اعظم کا سلہٹ سکسرز اور شاداب خان کا کھلنا ٹائٹنز کیساتھ معاہدہ ہے جبکہ شعیب ملک، حسن علی، رومان رئیس اور فہیم اشرف کا کومیلہ وکٹورین سے معاہدہ ہے۔
یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ اگر ویسٹ انڈیز کا دورہ پاکستان طے پا گیا تو اس صورت میں قومی کھلاڑیوں کی بنگلہ دیش روانگی میں مزید تاخیر ہو سکتی ہے۔ پی سی بی نے ویسٹ انڈیز کو نومبر کے آخری ہفتے لاہور میں ٹی 20 سیریز کھیلنے کی دعوت دے رکھی ہے اور نجم سیٹھی کا کہنا ہے کہ آئندہ تین سے چار روز تک سیریز کے شیڈول کا اعلان بھی کر دیا جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں