بیٹسمین شاٹ لگائے اور گیند سٹیڈیم میں کیبل پر چلنے والے ’سپائیڈر کیم‘ کیساتھ ٹکرا جائے تو کیا ہو گا؟ ایسی بات جو صرف کرکٹرز کو ہی معلوم ہے، جواب جان کر آپ حیران رہ جائیں گے

لاہور (ویب ڈیسک) کرکٹ کے کھیل میں جہاں کئی جدید قوانین اور ٹیکنالوجی متعارف کروائی گئی ہے وہیں کیمروں کی تعداد میں اضافے کیساتھ ساتھ ڈرون اور سپائیڈر کیم کا اضافہ بھی کیا گیا ہے۔
چھوٹا سا ڈرون کھیل شروع ہونے سے پہلے گیند لا کر امپائرز کو دیتا ہے تو سپائیڈر کیم سٹیڈیم میں ایک کیبل پر چلتا ہے جس کی رفتار بھی کافی تیز ہوتی ہے اور یہ کھیل کے دوران انتہائی دلچسپ اور شاندار تصاویر فراہم کرتا ہے۔
بہت سے لوگ یہ ضرور جاننا چاہتے ہوں گے کہ اگر کوئی بلے باز شاٹ مارے اور گیند سپائیڈر کیم یا کیبل کے ساتھ ٹکرا جائے تو کیا ہو گا؟ بلے باز کی شاٹ سے نکلا گیند وکٹ کیپر کے پاس پڑے ہیلمٹ کیساتھ ٹکرا جائے تو پانچ سکور بیٹنگ کرنے والی ٹیم کو مل جاتے ہیں تو کیا سپائیڈر کیم کے ساتھ گیند ٹکرانے پر بھی ایسا ہی ہوتا ہے؟
تو جناب! اس سوال کا دلچسپ جواب یہ ہے کہ اگر بلے باز کے شاٹ لگانے کے بعد گیند سپائیڈر کیم یا کیبل کیساتھ ٹکرا جائے گیند کو ”ڈیڈ بال“ قرار دیدیا جائے گا یعنی بیٹنگ ٹیم کو رنز ملیں گے اور نہ ہی باﺅلر کی کروائی گئی گیند میں اضافہ ہو گا بلکہ وہ گیند ہی دوبارہ کروانا پڑے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں