کرکٹ میچ کے دوران خوفناک حادثہ پیش آ گیا

لندن (سٹی نیوز) کرکٹ میچ کے دوران خوفناک حادثہ پیش آ گیا اور بلے باز کے بلے سے گولی جیسی رفتار سے نکلنے والی گیند سیدھی باؤلر کے سر سے جا ٹکرائی۔ حادثہ اس قدر خوفناک تھا کہ امپائر نے فوراً امدادی عملے کو گراؤنڈ میں طلب کر لیا جبکہ میدان میں موجود تمام کھلاڑیوں کی آنکھوں سے آنسو نکل آئے۔
انگلش کاؤنٹی کے ٹی 20 ٹورنامنٹ میں نوٹنگھم شائر آؤٹ لاز اور برمنگھم بیئرز کے درمیان میچ جاری تھا جب نوٹنگھم شائر آؤٹ لاز کے باؤلر لیوک فلیچر کے سر پر گیند لگ گئی۔ یہ میچ سکائی سپورٹ پر براہ راست نشر کیا جا رہا تھا جس کے باعث لاکھوں افراد نے باؤلر کے سر پر گیند لگنے کے مناظر دیکھے
28 سالہ باؤلر برمنگھم بیئرز کے 21 سالہ بلے باز سیم ہین کو باؤلنگ کروا رہے تھے جنہوں نے ان ہی کی جانب ایک زوردار شاٹ لگائی۔ حادثے کے وقت باؤلر اور بلے باز کے درمیان تقریباً 20 فٹ کا فاصلہ تھا اور لیوک فلیچر کو گولی کی رفتار سے آتی گیند سے بچنے کیلئے ذرا بھی وقت نہ مل سکا۔
یہ ان کے سر میں جا لگی جس کے باعث وہ گراؤنڈ میں ڈھیر ہو گئے جس پر امپائر اور کھلاڑیوں نے فوراً میڈیکل عملہ کو طلب کر لیا جبکہ ان کے ساتھی کھلاڑی شدید صدمے سے دوچار نظر آئے۔ لیوک فلیچر کو جب گراؤنڈ میں طبی امداد دی جا رہی تھی تو انگلش کھلاڑی سمت پٹیل سمیت تمام کرکٹرز اپنے آنسوؤں پر قابو نہ رکھ سکے۔
بلے باز سیم ہین بھی اس حادثے کے باعث صدمے میں نظر آئے جس پر دیگر کھلاڑیوں نے انہیں سنبھالا دیا۔ لیوک فلیچر کو میڈیکل عملہ گراؤنڈ سے باہر لے گیا۔ خوش قسمتی سے وہ اس قدر رفتار سے گیند لگنے کے باوجود چلنے کے قابل تھے ، انہیں قریب ہی واقع کوئین الزبتھ ہسپتال لے جایا گیا جہاں ان کی حالت خطرے سے باہر ہے اور انہیں جلد ہی ہسپتال سے فارغ کر دیا جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں