”یہ بندہ بار بار اپنے پاﺅں کی طرف کیوں دیکھ رہا ہے“ خواتین کے پیچھے جانے والے شخص کو پکڑ کر جب اس کی تلاشی لی گئی تو جوتوں میں سے ایسی چیز نکل آئی کہ پولیس اہلکار بھی شرم سے پانی پانی ہوگئے

نئی دلی (ویب ڈیسک) گھٹیا ذہنیت کے حامل لوگ خواتین کو ہراساں کرنے کے نت نئے طریقے ایجاد کرتے رہتے ہیں۔ بیت الخلاﺅں سے لے کر چینجنگ رومز تک چھپائے گئے خفیہ کیمرے اور قلم میں لگے جاسوس کیمروںتک خواتین کو ہراساں کرنے اور بلیک میل کرنے کے ہزاروں طریقے ہیں اور یہ سب چیزیں مارکیٹ میں باآسانی دستیاب ہوجاتی ہیں۔
اس طرح کے اوچھے ہتھکنڈوں کا قلع قمع کرنے کیلئے جاپان نے حال ہی میں جوتوں میں چھپائے جانے والے جاسوس کیمروں پر پابندی عائد کی ہے کیونکہ ان کے ذریعے خواتین کی سکرٹس کے نیچے سے تصاویر بنائی جاتی تھیں ، اسی طرح کی حرکت کرتا ہوا ایک شخص برطانیہ میں بھی گرفتار ہوچکا ہے، اب بھارتی ریاست کیرالہ میں بھی ایسے ہی ایک شخص کو گرفتار کیا گیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں