سٹاک مارکیٹ میں 195.90 پوائنٹس کی تیزی، 32 ہزار کی نفسیاتی حد بحال

لاہور: (ویب ڈیسک) پاکستان سٹاک مارکیٹ میں کاروباری ہفتے کے آخری روز کا اختتام تیزی پر ہوا، 100 انڈیکس 195.90 پوائنٹس بڑھ گیا۔ تیزی کے باعث 32 ہزار کی نفسیاتی حد بحال ہو گئی۔

تفصیلات کے مطابق رواں ہفتے پہلے کاروباری روز کے دوران سٹاک مارکیٹ میں 1042 پوائنٹس کی مندی ریکارڈ کی گئی جبکہ 100 انڈیکس 30 ہزار 579 پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا تھا، سرمایہ کاروں کے ایک کھرب 33 ارب روپے ڈوب گئے تھے۔

دوسرے کاروباری روز کے دوران پاکستان سٹاک مارکیٹ میں تیزی کی واپسی ہوئی، پورے کاروباری روز کے دوران 100 انڈیکس 652.40 پوائنٹس کی بڑھوتری دیکھی گئی تھی جس کے بعد 31 ہزار کی نفسیاتی حد بحال ہو گئی تھی اورسرمایہ کاروں کو 114 ارب روپے کا فائدہ ہوا تھا۔

تیسرے کاروباری روز کے دوران سٹاک مارکیٹ میں کاروبار کا اختتام 260.28 پوائنٹس کی مندی کے بعد 30971.27 پوائنٹس کی سطح پر ہوا تھا۔

چوتھے کاروباری روز کے دوران پاکستان سٹاک مارکیٹ کے 100انڈیکس میں 866 پوائنٹس کی تیزی دیکھی گئی جس کے بعد انڈیکس 31ہزار 837پوائنٹس پر بند ہوا تھا۔

آج آخری کاروباری روز کے دوران حصص مارکیٹ میں کاروبار کا آغاز غیر یقینی صورتحال پر ہوا، پہلے ہی ڈیڑھ گھنٹے کے دوران انڈیکس میں 334.99 پوائنٹس کی مندی دیکھی گئی تھی جس کے بعد انڈیکس 31502.31 پوائنٹس کی سطح پر دیکھا گیا تھا۔

پورے کاروباری روز کے دوران سٹاک مارکیٹ میں اُتار چڑھاؤ کا تسلسل دیکھنے کو ملا ایک موقع پر انڈیکس 31377.10 پوائنٹس کی سطح پر دیکھا گیا جبکہ تیزی کے باعث 100 انڈیکس 32086.10 پوائنٹس کی بلند ترین سطح پر بھی دیکھا گیا۔

پاکستان سٹاک مارکیٹ میں کاروبار کا اختتام اُتار چڑھاؤ کے بعد 195.90 پوائنٹس کی تیزی پر ہوا۔ جس کے بعد 100 انڈیکس 32033.20 پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیا۔

پورے کاروباری روز کے دوران کاروبار میں 0.62 فیصد کی بہتری دیکھی گئی، جبکہ 10 کروڑ 30 لاکھ 93 ہزار 737 شیئرز کا لین دین ہوا۔جس کے باعث سرمایہ کاروں کو 60 ارب روپے کا فائدہ ہوا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں