پہلی بار چین میں اس دیو قامت جانور کے پانچ انڈے مل گئے

بیجنگ (ویب ڈیسک) کروڑوں سال قبل کرہ ارض سے ناپید ہو جانے والے جانور ڈائنوسار کی اکا دْکا باقیات کئی جگہ سے برآمد ہوچکی ہیں لیکن پہلی بار چین میں اس دیو قامت جانور کے پانچ انڈے مل گئے ہیں، جس پر سائنسدان بھی حیرت زدہ رہ گئے ہیں۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ انڈے سطح زمین سے 24 فٹ کی گہرائی پر چونے کے پتھر میں محفوظ تھے اور یہ تقریباً 7 کروڑ سال پرانے ہیں۔
ڈائنوسار پر تحقیق کرنے والے سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ یہ انڈے سبزی خور فائٹو فیگس ڈائنوسار کے ہیں جو کہ ڈائنوسار کے کریٹیشیس دور میں پایا جاتا تھا۔ انڈوں کی دریافت جنوب مشرقی چین کے شہر فوشان کے پہاڑوں میں ہوئی۔ انڈے دریافت کرنے والے سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ان میں سے تین کو نقصان پہنچا جبکہ دو اچھی حالت میں ہیں۔
واضح رہے کہ اس سے پہلے بھی فوشان شہر کے پہاڑوں میں ڈائنوسار کی کچھ باقیات دریافت ہوچکی ہیں۔ اس شہر کو کروڑوں سال قدیم دور کے اس جانور کے حوالے سے خصوصی شہرت حاصل ہوچکی ہے۔ انڈوں کو مزید مطالعے کیلئے مقامی عجائب گھر کے ماہرین کے حوالے کردیا گیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں