محسن عباس کی بیوی کو شوہر کی غلطیاں نظر انداز کرنی چاہئے تھیں، اداکارہ میرا

کراچی: نامور پاکستانی اداکارہ میرا کا کہنا ہے کہ محسن عباس حیدر سے غلطی ہوئی ان کی اہلیہ کو اس غلطی کو نظر انداز کرنا چاہیئے تھا۔
فلم’’نامعلوم افراد‘‘سے شہرت حاصل کرنے والے اداکار و گلوکار محسن عباس حیدر پر ان کی اہلیہ فاطمہ سہیل نے دو ماہ قبل الزام لگایا تھا کہ محسن انہیں کئی برسوں سے تشدد کا نشانہ بناتے آرہے ہیں، یہاں تک کہ محسن نے انہیں اس وقت بدترین جسمانی اورذہنی تشدد کا نشانہ بنایا جب وہ حاملہ تھیں۔ اس کے علاوہ فاطمہ نے اپنے شوہر کو بے وفا قرار دیتے ہوئے ان کے اور ماڈل نازش جہانگیر کے درمیان ناجائز تعلقات کا بھی الزام لگایا۔
فاطمہ سہیل نے محسن عباس کے خلاف تشدد اور دھمکیوں کی ایف آئی آر درج کرائی ہے جب کہ شوبز فنکاروں سمیت سوشل میڈیا پر بھی محسن عباس کو بیوی پرگھریلو تشدد کرنےکے لیے شدید تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔
جہاں شوبز سے وابستہ افراد اہلیہ تشدد معاملے پر اپنی رائے دے رہے ہیں، وہیں پاکستان کی اسکینڈل کوئین اداکارہ میرانے بھی اس معاملے پر اپنی رائے دیتے ہوئے کہا ہے کہ محسن عباس حیدر سے غلطی ہوئی ان کی بیوی کو اس غلطی کو نظر انداز کرنا چاہئے تھا۔
اداکارہ میرا نے حال ہی میں عفت عمر کے شو میں شرکت کی جہاں میزبان کی جانب سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں اداکارہ میرا نے محسن کے ساتھ کام کرنے کا تجربہ شیئر کرتے ہوئے کہا محسن میرے ساتھ سیٹ پر بہت اچھے تھے، ان کا رویہ بہت دوستانہ تھا۔
میرا نے محسن عباس کو باصلاحیت اداکار قرارد یتے ہوئے کہا انسان سے غلطیاں ہوتی ہیں، تاہم ان غلطیوں کو نظر انداز کرنا چاہئے۔ جس پر میزبان نے کہا اگر غلطیاں ہوتی ہیں تو مان لینی چاہئیں، معافی مانگ لینی چاہئے۔ میزبان کی اس بات پر اداکارہ میرا نے کہا محسن عباس اچھا لڑکا ہے، تاہم میزبان عفت عمر نے بات کو یہیں ختم کردیا۔
واضح رہے کہ محسن عباس حیدر کی اہلیہ فاطمہ سہیل نے لاہور کی فیملی کورٹ میں خلع کا دعویٰ دائر کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ اب مزید محسن کے ساتھ رہنا نہیں چاہتیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں