وہ وقت جب اولمپین منصور احمد نے 1994ءمیں پاکستان کو ہاکی ورلڈکپ جتوایا

کراچی (سٹی نیوز) پاکستان کو ہاکی ورلڈ کپ جتوانے والے قومی ہیرو منصور احمد دل کے عارضے میں مبتلا تھے جو گزشتہ روز خالق حقیقی سے جا ملے اور ان کی نماز جنازہ آج بعد نماز ظہر کراچی میں ادا کی جائے گی۔

ان کی وفات سے قوم ایک عظیم کھلاڑی سے محروم ہو گئی ہے اور صلاح الدین، سابق ہاکی کپتان سمیع اللہ اور شہباز سینئر سمیت ہاکی سے وابستہ دیگر شخصیات اظہار افسوس کر رہے ہیں۔ 49 سالہ عالمی شہرت یافتہ گول کیپر کا دل صرف 20 فیصد کام کررہا تھا اور ان کے دل میں 7 سٹنٹس ڈالے گئے تھے جبکہ گردوں اور پھیپھڑوں نے بھی کام کرنا چھوڑ دیا تھا۔

منصور احمد نے پاکستان کی جانب سے 338 انٹرنیشنل میچ کھیلے۔ اور 1986ءسے 2000ءکے دوران اپنے کیریئر میں 3 اولمپکس اور کئی ہائی پروفائل ایونٹس میں پاکستان کی نمائندگی کی۔منصور احمد ہی وہ کھلاڑی ہیں جنہوں نے 24 سال قبل پاکستان کو چوتھی مرتبہ ہاکی کا عالمی چیمپیئن بنایا تھا۔ وہ 1994ءکے ہاکی کے ورلڈکپ میں پاکستان کے ہیرو تصور کیے جاتے تھے جبکہ انہیں دنیا کے نمبر ون گول کیپر کا اعزاز بھی حاصل تھا۔

ان کے انتقال کے بعد جہاں کئی سوال اٹھائے جا رہے ہیں تو وہیں 1994ءہاکی ورلڈکپ کے فائنل میچ کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی ہے۔ یہ ویڈیو دیکھنے والے پاکستانیوں کو جب اپنے قومی ہیرو منصور احمد کی موت سے کچھ روز قبل کی حالت یاد آتی ہے تو آنسو روکنا مشکل ہو جاتا ہے۔

۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں