کراچی میں خواجہ سرا شبیر کے قتل کا مقدمہ فیروز آباد تھانے میں درج

کراچی: گزشتہ رات کراچی کے علاقے طارق روڈ میں خواجہ سرا شبیرعرف شبانہ عرف عینی خان کے قتل کا مقدمہ مقتول کے کزن اللہ جیوایا کی مدعیت میں نامعلوم افراد کے خلاف فیروز آباد تھانے میں درج کر لیا گیا۔
پولیس کے مطابق مقتول خواجہ سرا کے فلیٹ سے آلہ قتل یعنی چھرا بھی برآمد ہوا ہے، خواجہ سرا شبیر گھر میں اکیلا رہتا تھا، خواجہ سرا کو تیز دھار آلے کے پے در پے وار کر کے قتل کیا گیا، مقتول کے پوسٹ مارٹم پورٹ کے مطابق شبیر عرف شبانہ کے سر، چہرے، بازووں اور جسم کے مختلف حصوں پر تیز دھار آلے کے نشانات پائے گئے۔
خواجہ سرا کی لاش ورثا کے حوالے کر دی گئی ہے جبکہ مقتول کی میت کو تدفین کے سلسلے میں بہاولپور روانہ کردیا گیا ہے، پولیس کا موقف ہے کہ آلہ قتل سے انگلیوں کے نشان لینے کیلئے برآمد ہونے والے چھرے کو فرانزک ڈویژن بھجوا دیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں