لاپتہ افراد کیس، عدالت عالیہ نے اعلیٰ پولیس افسر کو کمرہ عدالت سے ہی گرفتار کروا دیا

کراچی(این این آئی)عدالتی احکامات کی تعمیل نہ کرنے پر لاپتا افراد کیس میں پولیس افسر کو تحویل میں لے لیا گیا۔ ہائی کورٹ نے قرار دیا کہ لوگ غائب ہیں کسی کو احساس ہی نہیں، اب کوئی پولیس افسر لاپرواہی کرے گا تو اس کو گرفتار کرنے کا حکم دینگے۔ بدھ کوسندھ ہائیکورٹ میں تین لاپتا افراد کی بازیابی سے متعلق درخواستوں کی سماعت ہوئی۔ لاپتہ افراد کا سفری ریکارڈ پیش نہ کرنے پر عدالت نے برہمی کا اظہار کیا۔ ہائی کورٹ نے ڈی ایس پی تصدق وارث کو کمرہ عدالت سے تحویل میں لینے کا حکم دیدیا۔ جسٹس نعمت اللہ پھلپھوٹو نے کہا کہ ڈی ایس پی کمرہ عدالت سے باہر نہیں جائیگا۔ عدالت نے لاپتا شہری عارف نظامی، محمد علی اور نعیم کی ٹریول ہسٹری طلب کی تھی تاہم پولیس ریکارڈ پیش کرنے میں ناکام رہی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں