’’ میں نے خواب میں سورہ رحمٰن پڑھی اور پھر اگلے دن جب دفتر گیا تو میرے باس نے ۔۔۔‘‘ آپ بھی جانئے کہ دفتری معاملات میں جب کسی کو کوئی مصیبت پیش آتی ہے تو اللہ اسکی کیسے رہ نمائی فرماتا ہے ؟

لاہور(نظام الدولہ )’’میں روزانہ قرآن مجید کی کسی نہ کسی سورہ مبارکہ کی تلاوت کرنے کے بعد اپنے آفس جاتا ہوں۔کئی سال سے یہی میرا معمول ہے۔چند روز پہلے میں نے خواب میں پہلی بار دیکھا کہ کوئی چیز میرا گلا دبا رہی ہے، لیکن میں سورہ رحمٰن کی تلاوت کررہا ہوں۔میرے اردگرد اندھیرا سا تھا جو آہستہ آہستہ چھٹنے لگتا ہے ۔اسکے بعد میری آنکھ کھل جاتی ہے۔اس دن میں جب آفس گیا تو میرے باس نے مجھے میرے ایک ساتھی کے خلاف گواہی دینے پر مجبور کیا۔میرا وہ ساتھی اچھا انسان ہے۔قابل بھی ہے۔میرا باس اس کی قابلیت سے جلتااور خوف کھاتا ہے۔باس سے چونکہ میرے تعلقات بھی اچھے رہے ہیں اس لئے انہوں نے انتہائی شرمناک الزام اس پر لگایا اور کہا کہ اس میں مجھے اسکا ساتھ دینا ہے ۔لیکن میں نے اسکی بات نہیں مانی۔ظہر کی نماز کا وقت آیا تو جب میں نے قرآن مجید کھولا تو حسن اتفاق سے سورہ رحمن میرے سامنے آگئی۔پوچھنا چاہتا ہوں کہ کیا میرے خواب اور اس معاملے کا آپس میں کوئی تعلق ہے۔ آپ مجھے اس خواب کی تعبیر بتادیں گے تو بڑا ممنوں ہوں گا ‘‘(عبداللہ ،اسلام آباد )
یہ اچھا خواب ہے ۔ اللہ آپ کو سچائی اور ایمانداری کی راہ پر چلانا چاہتا ہے۔نیک لوگوں کے لئے ایسے خواب رہ نمائی کا باعث بن جاتے ہیں۔خواب میں سورہ رحمٰن کی تلاوت کرنا اسی سچائی کی دلیل ہے ،حق گوئی اور اعلیٰ اخلاقی اقدار کی نشانی ہے جو اللہ نے آپ کو عطا کی ہوئی ہے۔تعبیر کی رو سے آپ کو تنگ کرنے
کی کوشش کرنے والا کامیاب نہ ہوگا ۔آپ کی استقامت سے ہر طرح کی مایوسی کے بادل چھٹ جائیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں