یہ حکومت کا کام ہے کہ وہ اسے پبلک کرے یا نہ کرے

اسلام آباد (سٹی نیوز) سابق وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ ڈان لیکس پر ہونے والی تحقیقات کی رپورٹ شائع ہونی چاہئے تاہم یہ حکومت کا کام ہے کہ وہ اسے پبلک کرے یا نہ کرے۔
پریس کانفرنس کرتے ہوئے چوہدری نثار نے کہا کہ ڈان لیکس کے معاملے پر انکوائری حکومت کے حکم پر ہوئی جبکہ وزارت داخلہ کا کام صرف اتنا ہوتا ہے کہ حکومت نے جو بھی انکوائری کروانی ہو، اس کا نوٹیفکیشن جاری کرتی ہے۔ اس کمیٹی کے ممبران میں ریٹائرڈ جج، سیکرٹری اسٹیبلشمنٹ، ڈائریکٹر آئی بی، آئی ایس آئی اور ایم آئی کے نمائندے تھے جو سینئر موسٹ تھے اور یہ وزارت داخلہ کے ماتحت نہیں تھے بلکہ ایف آئی اے کا جونیئر ترین آدمی وزارت دخلہ کے ماتحت تھا۔
اب یہ ذمہ داری گورنمنٹ پر عائد ہوتی ہے کہ وہ اس کی رپورٹ کو پبلک کرنے یا نہ کرے۔ آئندہ جب حکومت کے کسی شخص سے آپ کا سامنا ہو تو اس سے پوچھئے گا البتہ میں سمجھتا ہوں کہ یہ رپورٹ شائع ہونی چاہئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں