10سال قبل برطانیہ کے شہر لیورپول کے نیچے زیرزمین سرنگوں کے ایک جال کا انکشاف ہوا

لندن(ویب ڈیسک) 10سال قبل برطانیہ کے شہر لیورپول کے نیچے زیرزمین سرنگوں کے ایک جال کا انکشاف ہوا تھا۔ تب سے ماہرین کھدائی میں مصروف تھے اور اب جا کر ایک سرنگ مکمل طور پر دریافت کر لی گئی ہے۔ ماہرین نے ان سرنگوں کے متعلق ایسا انکشاف کیا ہے کہ سن کر آپ دنگ رہ جائیں گے۔ یہ سرنگیں امیر ترین شخص جوزف ویلیم سن نے 1810ء سے 1840کے درمیان بنوائی تھیں جو تمباکو کے بہت بڑے تاجر تھے۔ اب ماہرین نے بتایا ہے کہ ’’جوزف ویلیم سن ایک کٹر مسیحی فرقے سے تعلق رکھتے تھے اور ہرمجدون کی لڑائی اور قیامت پر ان کا یقین بہت پختہ تھا، چنانچہ انہوں نے یہ سرنگیں ہرمجدون کی لڑائی اور اس کے بعد برپا ہونے والی قیامت سے محفوظ رہنے کے لیے بنوائی تھیں۔‘‘
یہ سرنگیں شہر کے ’ایج ہل‘ کے علاقے کے نیچے موجود ہیں، جن کی تعمیر 1810ء میں شروع ہوئی۔ جوزف نے ان سرنگوں کی تعمیر کے لیے ہزاروں کاریگروں اور مزدوروں کی خدمات حاصل کیں جو 1840ء میں جوزف کی موت تک ان کی تعمیر میں مصروف رہے۔ جوزف کے انتقال کے بعد اس منصوبے کے لیے فنڈز مہیا نہ ہونے پر کام روک دیا گیا۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ ’’یہ سرنگیں 17فٹ گہرائی میں بنائی گئی ہیں جن میں کئی کمرے بھی موجود ہیں۔ تاحال ایک سرنگ اور ایک کمرہ ہی دریافت کیا جا سکا ہے تاہم یہ سرنگیں ممکنہ طور پر دور تک جاتی ہیں۔‘‘
سرنگوں کی کھدائی کرنے والے ماہر کرس الیس نے دی مرر سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ’’10سال قبل کھدائی کے دوران نیچے سے ایک اینٹ ملی تھی۔ اس اینٹ کی حقیقت جاننے کے لیے جب مزید کھدائی کی گئی تو نیچے سرنگوں کے ایک جال کا انکشاف ہوا۔ تب سے ہم ان سرنگوں کی کھدائی کا کام جاری رکھے ہوئے ہیں۔ان تمام سرنگوں کی کھدائی کے لیے کئی سال اور لگیں گے۔‘‘

اپنا تبصرہ بھیجیں