’اپنی برہنہ تصویر بھیج کر تم نے ہی تو بلایا ہے‘ نوجوان لڑکی کے گھر پر اچانک یکے بعد دیگرے مردوں کی آمد، یہ کام کس نے کیا تھا؟ بالآخر حقیقت سامنے آئی تو دنگ رہ گئی، یہ تو سوچ بھی نہیں سکتی تھی کہ

لندن(ویب ڈیسک)آج کے جدید دور میں پیار محبت کے معاملات بھی ڈیجیٹل ہو چکے ہیں۔ سوشل میڈیا پر ملنے والے نوجوان افراد چند میسجز کا تبادلہ کرتے ہیں اور پیار کی کہانی شروع ہو جاتی ہے، مگر بدقسمتی سے ان تعلقات کا انجام اکثر افسوسناک ہوتا ہے۔ خصوصاً وہ لڑکیاں جو محبت کی تلاش میں مجرم صفت لوگوں کے چنگل میں پھنس جاتی ہیں انہیں تو بہت ہی تکلیف دہ نتائج دیکھنے پڑتے ہیں۔ ایک برطانوی لڑکی کی بھی بدقسمتی تھی کہ انٹرنیٹ پر ملنے والے ایک نوجوان سے دوستی کر لی، مگر جب اس سے نجات حاصل کرنے کا فیصلہ کیا تو اُس بدبخت نے ایک ایسی حرکت کر ڈالی کہ بیچاری کے لئے جینا عذاب کر ڈالا۔
میل آن لائن کے مطابق 23 سالہ شیطان صفت نوجوان جوئل لینڈن نے اپنی سابق گرل فرینڈ کے نام سے سوشل میڈیا پر جعلی پروفائل بنایا اور اس پر لڑکی کی قابل اعتراض تصاویر پوسٹ کر ڈالیں۔ اس نے جعلی پروفائل سے سوشل میڈیا صارفین کو میسج بھی بھیجے، جن میں بتایا کہ وہ ایک جسم فروش لڑکی ہے اور کوئی بھی اس کی خدمات حاصل کر سکتا ہے۔

لڑکی کا کہنا ہے کہ ”اچانک میرے گھر پر اجنبی مردوں کی آمد شروع ہو گئی۔ جو بھی آتا میرانام لے کر مجھ سے ملنے کو کہتا اور جب میں حیرت کا اظہار کرتی تو مجھے بتایا جاتا کہ میں نے خود ہی اپنی برہنہ تصاویر بھیج کر انہیں بلایا ہے۔ وہ میرے ساتھ جسمانی تعلق کے لئے آ رہے تھے، اور میرے لئے یہ صورتحال سخت صدمے کا سبب تھی۔ میں اپنے والدین اور فیملی کے ساتھ رہ رہی ہوں اور سب کے سامنے مجھے یہ شرمندگی اٹھانا پڑ رہی تھی۔“
متاثرہ لڑکی نے جب اس معاملے کی پولیس کو شکایت کی تو تحقیقات کا آغاز ہوا اور تب یہ انکشاف سامنے آیا کہ یہ صورتحال جوئل نامی نوجوان کی شیطانی حرکت کا نتیجہ تھی۔ ملزم کا تعلق سپرنگ فیلڈ لیکس کے علاقے سے ہے اور متاثرہ لڑکی کا کہنا ہے کہ وہ اس کا سابق بوائے فرینڈ ہے۔
عدالت میں پیش کی گئی نفسیاتی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ملزم نے جب اپنی سابق گرل فرینڈ کی برہنہ تصاویر ایک جعلی سوشل میڈیا اکاونٹ پر پوسٹ کیں تو وہ نشے کی حالت میں تھا اور اسے کچھ عرصے سے ڈپریشن کا سامنا بھی ہے۔ اس کے وکیل کاکہنا تھا کہ وہ اپنی سابقہ گرل فرینڈ کو واپس حاصل کرنا چاہتا تھا اور اس کوشش میں یہ افسوسناک حرکت کر بیٹھا۔ عدالت نے تمام شواہد اور ثبوتوں کا جائزہ لینے کے بعد جوئل کو مجرم قرار دیتے ہوئے چھ ماہ قید اور ڈیڑھ سال زیر نگرانی رکھنے کی سزا سنا دی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں