پولیس اہلکار اس نوجوان لڑکی کو کیوں ماررہے ہیں؟ اصل وجہ جان کر ہرمسلمان افسردہ ہوجائے کیونکہ

نئی دہلی (ویب ڈیسک)بھارت میں پولیس اہلکارنے سرعام پر ایک ہندو خاتون کو تشدد کانشانہ بناڈالا اور اس کی وجہ جب سامنے آئی تو مسلمان بھی افسردہ ہوگئے، اس خاتون کا جرم یہ تھا کہ اس نے ایک مسلمان لڑکے کیساتھ موجود تھی ، تشدد کا نشانہ بنائے جانے کی ویڈیو بھی سامنے آگئی ۔
تفصیل کے مطابق بظاہریہ ویڈیو اترپردیش کے علاقے میرٹ کی ہے جہاں پولیس کی گاڑی میں موجود لڑکی کو تشدد کا نشانہ بنایاجارہاہے ، اس خاتون کو ممکنہ طورپر ہجوم سے بازیاب کرایاگیاتھا۔ٹائمز آف انڈیا کے مطابق ویڈیو اس وقت بنائی گئی جب جوڑے کو دو الگ الگ گاڑیوں میں تھانے منتقل کیاجارہاتھااور اہلکار کو یہ کہتے سناجاسکتاہے کہ ’ آپ ایک مسلمان کو ترجیح دیتی ہیں جبکہ اردگرد بہت سے ہندوموجود ہیں“۔اسی دوران خاتون پولیس اہلکارنے لڑکی کی پٹائی شروع کردی اور اس کا سکارف بھی نوچ لیا جس سے لڑکی نے اپنا چہرہ ڈھانپ رکھاتھا۔دوسری طرف دعویٰ کیاگیاکہ تشدد کرنیوالی اہلکار کو معطل کرکے انکوائری شروع کردی گئی ۔

23ستمبر کو ہندولڑکی کو مسلمان دوست اور میڈیکل کلاس فیلوکیساتھ مردوں کے ایک ہجوم نے تشدد کا نشانہ بنایا جو ممکنہ طورپر انتہاءپسند تنظیم کے کارکن تھے ، بدقماش لڑکے کے گھر میں گھس گئے اور تشددکانشانہ بنانے کے بعد پولیس کے حوالے کردیا، ہجوم نے دعویٰ کیا کہ دونوں شادی کرنا چاہتے ہیں۔ ویڈیو دیکھئے

اپنا تبصرہ بھیجیں