توہین عدالت کیس میں قید نہال ہاشمی کی سزا مکمل، آج ہی رہائی کا امکان

سلام آباد (ویب ڈیسک) مسلم لیگ ن کے رہنما نہال ہاشمی کی توہین عدالت کیس میں سزا مکمل ہوگئی ہے جس کے باعث آج (بدھ کو) ان کی رہائی کا امکان ہے۔
سپریم کورٹ آف پاکستان نے ن لیگی رہنما و سابق سینیٹر نہال ہاشمی کو توہین عدالت کیس میں ایک ماہ ت مطابققید اور 5 سال کیلئے نا اہلی کی سزا سنائی تھی۔ نہال ہاشمی کو سزا یکم فروری کو سنائی گئی تھی ،چونکہ فروری 28 روز کا مہینہ ہوتا ہے اس لیے نہال ہاشمی مزید 2 روز سزا سے بچ گئے جس کے باعث انہیں آج ہی رہا کیے جانے کا امکان ہے۔
واضح رہے کہ ن لیگی سابق سینیٹر نے 28 مئی 2017کو کراچی میں تقریرکرتے ہوئے عدلیہ کو دھمکیاں دی تھیں ۔ نہال ہاشمی کی براہ راست دھمکیوں کا چیف جسٹس نے نوٹس لے لیا جس کے بعد جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی اور 24جنوری کو کیس کا فیصلہ محفوظ کیا جو یکم فروری کو سنایا گیا۔ کیس کا فیصلہ2 اور 1 کی نسبت سے آیا تھا جس کے بعد کمرہ عدالت سے ہی نہال ہاشمی کو گرفتار کرکے جیل منتقل کردیا گیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں