آدمی نے کھاد کی جگہ ثابت انڈہ اور کیلا زمین میں دبا دیا

لندن(نیوزڈیسک) زمین میں پودے اگانے کے لئے پہلے کھدائی کی جاتی ہے اور پھر اس میں بیج ڈال کر اسے پانی اور کھاد دی جاتی ہے،اگر زمین زیادہ زرخیز نہ ہوتواس میں کھاد ڈالی جاتی ہے۔
اس آدمی نے کھاد کی جگہ ثابت انڈہ اور کیلا زمین میں دبا دیا جس کامقصد یہجاننا تھا کہ کیلے اور انڈے کی وجہ سے زمین کی زرخیزی میں اضافہ ہوتا ہے یا کمی۔اس تجربے میں اس نے دو 10فٹ گہرے گڑہے کھودے اور ایک میں انڈہ اور کیلا ڈالاجبکہ دوسرے میں کچھ بھی نہیں ڈالا گیا۔انڈے اور کیلے کو چار سے پانچ انچ مٹی ڈالنے کے بعد ڈھانپ دیا گیا اور اس کے بعد ٹماٹر کا پودا لگایا گیا۔اب ان دونوں ٹماٹروں کے پودے کی نشوونما دیکھی گئی۔اس کا کہنا ہے کہ یہ اشیائثابت رکھنے کا یہ فائدہ ہے کہ جب ٹماٹر کی نشوونما ہوگی تو اس کی جڑیں کیلے کو مضبوطی سے پکڑنے کے ساتھ انڈے سے غذائیت پائیں گی۔انڈے کے چھلکے سے پودے کو کیلشیم ملے گا جس سے اس کی جڑیں مضبوط ہوں گی جس سے پودامضبوط ہوگا اور بیماری سے دور رہے گا۔اس شخص کا کہنا ہے کہ یہ قدرتی کھاد ہے جس سے پودے کو بہت زیادہ فائدہ ہوتا ہے اور اس کی نشوونما تیز ہوجاتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں