عمران خان کا وہ حلقہ جہاں سب سے زیادہ امیدوار میدان میں آگئے ، کون سا حلقہ ہے ؟

اسلام آباد (سٹی نیوز) انتخابات 2018 کیلئے گہما گہمی عروج پر پہنچ چکی ہے ، تمام سیاسی پارٹیاں میدان میں ہیں لیکن اصل مقابلہ تحریک انصاف اور مسلم لیگ ن کے مابین ہے۔ دونوں پارٹیوں کی جانب سے مختلف حلقوں میں انتہائی مضبوط امیدوار میدان میں اتارے گئے ہیں لیکن پاکستان کا سب سے اہم اور بڑا حلقہ این اے 53 اسلام آباد کو قرار دیا جا رہا ہے جہاںسابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی اور تحریک انصاف کے کپتان عمران خان مد مقابل ہیں۔ اس حلقے میں مقابلہ ان دونوں امیدواروں کے مابین ہی ہوگا لیکن مجموعی طور پر مذکورہ حلقے میں 36 امیدوار میدان میں ہیں۔

این اے 53 عمران خان اور شاہد خاقان عباسی کے مد مقابل ہونے کی وجہ سے ملک کا اہم ترین حلقہ تو پہلے ہی تھا لیکن اب 36 امیدواروں کے سامنے آنے سے ملک کا سب سے بڑا حلقہ بھی بن گیا ہے جس کا بیلٹ پیپر ہی اتنا برا ہوگا کہ ووٹرز کیلئے اپنے پسند کا امیدوار ڈھونڈنا جوئے شیر لانے کے مترادف ہوجائے گا۔ این اے 53 میں عائشہ گلالئی اور مسلم لیگ ن کے سابق سینیٹر ظفر علی شاہ کے علاوہ دونوں جماعتوں کے وہ امیدوار میدان میں ہیں جو اپنی پارٹی قیادت سے ناراض ہیں۔

الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری کی جانے والی امیدواروں کی حتمی فہرست کے مطابق اسلام آباد کے حلقوں این اے 52، 53 اور 54 سے مجموعی طور پر 76 امیدوار میدان میں ہیں۔ این اے 54 سے 28 امیدوار میدان میں اتریں گے لیکن یہاں اصل مقابلہ تحریک انصاف کے اسد عمر اور لیگی رہنما انجم عقیل کے مابین ہوگا۔ اسلام آباد کے حلقہ این اے 52 سے طارق فضل، افضل کھوکھراورخرم نوازآمنے سامنے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں